جمہوریت میں نظریاتی سیاست کی موت

جس سودی سرمایہ دارانہ معیشت نے اپنے تحفظ کے لیے سیاسی جماعتوں اور گروہوں کی باہم چپقلش کی بنیاد پر ایک شاندار جمہوری نظام کو تخلیق کیا ہے وہ اس قدر سادہ تھے کہ اس کے ذریعے کسی نظریاتی طاقت مزید پڑھیں

ٹیکنالوجی کے خدایانِ یزداں واہرمن کے پجاری

ٹیکنالوجی کے بت کے پرستار، ہرنئی ایجاد کے موجد کوپیغمبرکا مقام دینےوالے، شانزے لیزے، آکسفورڈ سٹریٹ اورٹائمزاسکوائرنیویارک کا سفرعمرے اورحج جیسے عقیدت سے کرنے والے اوروہاں کے طواف کی کیفیتوں کوایک ادائے عاشقانہ اورفریفتگی سے بیان کرنے والے، ادیب، دانشور، مزید پڑھیں

پیشہ ورانہ خطرات سے جسمانی خودمختاری اور”می ٹو” تک

جدید لائف سٹائل کا کمال یہ ہے کہ اس نے بلا امتیازمذہب، اخلاق اوراقدارہراس شعبے، پیشے اورکام کاج کوعزت دی جس سے سرمایہ کمایا جا سکتا ہے یا اس سے لائف سٹائل کی آسانیاں خریدی جاسکتی ہیں. کیونکہ سرمایہ ایک مزید پڑھیں

طَرِیقََتِکُمُ المُثلیٰ (آئیڈیل لائف سٹال) حصہ دوم

فرعون اوراس کے ساتھی اپنی قوم کو حضرت موسیٰ علیہ السلام کی تعلیمات سے خوفزدہ کررہے تھے کہ اگرموسیٰ علیہ السلام اورہارون علیہ السلام تم پرغالب آ گئے تووہ تم سے تمہارا “مثالی طریق زندگی” (ideal lifestyle) چھین لیں گے. مزید پڑھیں

طَرِیقَتِکُمُ المُثلیٰ (آئیڈیل لائف سٹال)

انسانی تہذیبی کشمکش کوعلامہ اقبال نے اپنے اس شعرمیں‌ جس خوبصورتی سے سمیٹا ہے، وہ اس کائنات میں معرکہ حقو باطل کی تاریخ‌ ہے. ستیزہ کاررہا ہےازل سے تا امروز چراغ مصطفوی سے شرار بولہبی سیدالانبیاء صلی اللہ علیہ وسلم مزید پڑھیں

سید ابوالاعلیٰ مودودی اورجدید نظریاتی کشمکش

طرززندگی اورلائف سٹائل ایک ایسا لفظ ہے جوگیارہ ستمبر2001ء کے ورلڈ ٹریڈ سنٹرکے مشہورسانحے کے بعد عالمی منظرنامے پرانتہائی شدت اورقوت کے ساتھ گونجا. گیارہ ستمبرکے بعد پوری مغربی دنیا کے غم وغصے اورانتقام کا نشانہ مسلم امہ اورصرف اورصرف مزید پڑھیں

ڈیڑھ ارب مردہ مسلمانوں کی آصفہ

بملہ دیوی ان ہندو عورتوں میں شامل تھی جنہوں نے ہائی وے بلاک کرکرے بھوک ہڑتال کررکھی تھی. نیویارک ٹائمز کا نمائندہ اس احتجاج کی وجہ پوچھنے اس کے پاس پہنچا تواس نے کہا آٹھ سالہ مسلمان بچی آصفہ جسے مزید پڑھیں

بشارالاسد، شام اوراسرائیل

چونکا دینے والے فقرے تھے، “اسرائیل کی خواہش ہے کہ بشارالاسد کی حکومت اس قدرکمزورہوجائے کہ وہ اس کے مخالف کسی گروہ کی مدد کرنے کے قابل نہ رہے، مگروہ کسی طورپربھی بشارالاسد حکومت کا خاتمہ نہیں چاہتا اس لیے مزید پڑھیں

۹۲ سے 92 تک

قبلہ والد صاحب جب کبھی کوئی تحریرلکھنے لگتے توکاغذ کے اوپرعین درمیان میں ۷۸۶ (سات سوچھیاسی) لکھتے. پھراس کے نیچے ایک ایسی لکیرکھینچتے جوعموماً کشیدہ الفاظ کے لئے کھینچتی جاتی ہے اوراس کے نیچے ۹۲لکھتے. یوں تحریرکے اوپراس طرح کی مزید پڑھیں

بیوروکریٹس سے کلیپٹوکریٹس تک

پاکستان کی اس طاقتوربیورکریسی نے گزشتہ پینتیس سال سے صرف ایک مہارت اورایک ہنرسیکھا ہے اوروہ یہ کہ کیسے اپنے سیاسی آقاؤں کوخوش کیا جاتا ہے. یہ خوشی دوحصوں پرمشتم ہے، پہلی خوشی ان کی دولت، تجارتی سلطنت اورکاروبارکی وسعت مزید پڑھیں