کلثوم نوازحلف لیے بغیربھی ممبرپارلیمنٹ ہیں، الیکشن کمیشن

Download PDF

kalsoom-nawaz-member-parliment-oath
اسلام‌آباد: الیکشن کمیشن آف پاکستان نے جمعرات کے روز وضاحت کی ہے کہ کلثوم نواز حلف نہ لینے کے باوجود پارلیمنٹ کی ممبرہیں.

پاکستان تحریکِ انصاف کی جانب سےالیکشن کمیشن کو ایک خط بھیجا گیا تھا جس میں درخواست کی گئی تھی کہ NA-120 میں الیکشن جیتنے کے باوجود اب تک حلف‌‌‌‌‌‌‌‌‌ نہ اٹھنے کی بنا پرنااہل قراردیا جائے. الیکشن کمیشن کا کہنا ہے کہ سابق وزیراعظم نوازشریف کی اہلیہ اپنی طبی صورتحال کی وجہ سے حلف اٹھانے سے قاصرہیں لیکن وہ اب بھی پارلیمنٹ کی ممبرہیں.

الیکشن کمیشن نے مزید وضاحت کرتے ہوئے کہا کہ قومی اورصوبائی اسمبلیوں کے کسی بھی منتخب ممبر کے حلاف اٹھانے کی کوئی ڈیڈلائن نہیں ہے. البتیٰ ممبرقومی اسمبلی جوآئین کے آرٹیکل 65 کے تحت پارلیمنٹ میں شرکت کرنا چاہتے ہیں اورووٹ دینا چاہتے ہیں ان کے لیے لازمی ہے کہ وہ پہلے اپنا حلف اٹھائیں.

پاکستان تحریکِ انصاف کے ترجمان فواد چوہدری نے خط میں کہا تھا کہ کلثوم نواز اپنی قانونی ذمہ داری ادا کرنے سے قاصرہیں اوروہ جیتے ہوئے امیدوارکے طورپرقومی اسمبلی میں حلف اٹھانے سے بھی قاصرہیں. فواد چوہدری نے اس معاملہ پرالیکشن کمیشنرکے خیالات کے بارے میں پوچھا تھا.

کلثوم نواز کوکینسرکا عارضہ لاحق ہے جس کی تشخیص اس سال اگست میں ہوئی تھی. وہ لندن میں زیرِ‌علاج ہیں اوراب تک ان کی تین سرجریاں ہوچکی ہیں.

اپنا تبصرہ بھیجیں