ڈونلڈ ٹرمپ کی بہومشکوک ڈاک ملنے کے بعد ہسپتال منتقل

trump's-daughter-in-law-unknown-substance
نیویارک: امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی بہووینیسا کوپیرمشکوک ڈاک ملنے کے بعد ہسپتال منتقل کردیا گیا ہے اس ڈاک میں ایک سفید سفوف موجود تھا جس کی اب تک شناخت نہیں کی گئی ہے.

پولیس ذرائع کے مطابق یہ خط ڈونلڈ ٹرمپ کے سب سے بڑے بیٹے ڈونلڈ ٹرمپ جونیئرکے نام بھیجا گیا تھا اوراس میں ایک پراسرارمادہ موجود تھا. امریکی میڈیا کی رپورٹس کے مطابق خط میں سفید پاؤڈرموجود تھا لیکن ایک حکومتی ترجمان کے مطابق “اس پاؤڈرکی جانچ پڑتال کی گئی ہے اوریہ کوئی خطرناک مادہ نہیں ہے”.

امریکی سیکرٹ سروس کا کہنا ہے کہ آج نیویارک میں ملنے والے مشکوک پیکچ کی تفتیش کا آغاز کردیا گیا ہے.

امریکی نشریاتی ادارے این بی سی کا کہنا ہے کہ وینیساٹرمپ جوکہ پانچ بچوں کی ماں ہیں کونیویارک پریسبیٹارین ویل کورنل میڈیکل سینٹرمیں لے جایا گیا لیکن صرف حفاظتی تدابیر کے لیے کیونکہ اس بات کو کوئی ثبوت نہیں ملا کہ خط میں موجود مادہ خطرناک نہیں تھا اورنہ ہی کسی کوکوئی نقصان پہنچا تھا.

وینیسا ٹرمپ کے خاوند اوردیورایرک ٹرمپ دونوں نیویارک میں رہتے ہیں اوراپنے والد کا رئیل سٹیٹ کاروبارسنبھالتے ہیں. امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے جنوری 2017ء میں صدر کا عہدہ سنبھالنے سے پہلے اپنی تمام کاروباری مصروفیات اپنے بیٹوں کومنتقل کردی تھیں.

اپنا تبصرہ بھیجیں