لاہوری دلہے کا شادی پرسونے کے جوتوں اورٹائی پرمبنی لباس

groom-wears-gold-tie-shoes-lahore
لاہور: پنجاب کے دارلحکومت سے تعلق رکھنے والے ایک شخص نے اپنی شادی کے موقع پرجولباس پہن رکھا تھا اس کی مالیت 25 لاکھ روپے تھی. ویسے توکہا جاتا ہے کہ ہیرے اورجواہرات عورتوں کی خوبصورتی بڑھاتے ہیں لیکن اس لاہوری دولہے نے یہ ثابت کردیا ہے کہ سونا صرف عورتوں کے لیے ہی نہیں‌ ہے.

شادی بیاہ کے موقع پرعام طورپردلہن تیار ہوتے وقت سونے کے زیورات پہنتی ہے لیکن لاہورکے حافظ سلمان شاہد نے روایتی طریقہ کارسے ہٹتے ہوئے خود اپنے لباس کے ساتھ ڈھیرسارا سونا پہن رکھا تھا. مقامی میڈیا کے مطابق حافظ سلمان شاہد نے اپنے ولیمے کے لیے جولباس تیارکروایا تھا اس کی مالیت 25 لاکھ روپے ہے. سلمان نے 32 تولے سونے سے تیارکردہ جوتے پہن رکھے تھے جن کی مالیت 17 لاکھ روپے ہے جبکہ ان کی ٹائی بنانےمیں 10 تولے سونا استعمال ہوا اوراس کی کل مالیت 5 لاکھ روپے بتائی جاتی ہے. اس کے علاوہ دولہے نے جوسوٹ پہن رکھا تھا اس میں بھی کرسٹل اوردوسرے جواہرات جڑے ہوئے تھے اوراس سوٹ کی مالیت 63 ہزارروپے تھی.


حافظ سلمان شاہد کے ساتھ مسلح گارڈ بھی موجود تھے جن کا مقصد دولہے کی حفاظت نہیں بلکہ اس سونے کی حفاظت تھی جودولہے نے زیب تن کررکھا تھا. میڈیا سے بات کرتے ہوئے دولہے کا کہنا تھا کہ اسے ہمیشہ سے ہی منفرد لباس پہنے کا شوق تھا اوروہ اپنی شادی کے موقع پربھی انتہائی منفرد دکھنا چاہتا تھا اوراسی لیے سونے کے جوتے اورٹائی پہننے کا خیال اس کے ذہن میں آیا.

واضح رہے کہ حافظ سلمان شاہد سات بہنوں کے اکلوتے بھائی ہیں اوران کے والدین اپنے اکلوتے بیٹے کی ہرخواہش پوری کرنا چاہتے تھے.

اپنا تبصرہ بھیجیں