afghanistan-blast

افغانستان: عید میلادالنبیﷺ کی تقریب میں خودکش دھماکا، 50 افراد ہلاک

افغانستان میں 12 ربیع الاول کے سلسلے میں ہونے والی تقریب کے دوران خود کش دھماکے کے نتیجے میں کم از کم 50 افراد ہلاک اور 83 سے زائد زخمی ہو گئے۔

وزارت صحت کے ترجمان وحید مجروح نے بتایا کہ جشن عید میلاد النبی صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کے سلسلے میں منگل کو افغانستان کے دارالحکومت کابل کے شادی ہال میں علما کا اجلاس جاری تھا کہ اس دوران دھماکا ہو گیا۔

وزارت داخلہ کے ترجمان نجیب دانش نے بتایا کہ ابتدائی معلومات کے مطابق یہ ایک خود کش دھماکا تھا جس کے نتیجے میں 50 سے زائد افراد ہلاک اوردرجنوں زخمی ہوئے۔

ایک آفیشل نے بتایا کہ دھماکا مقامی وقت کے مطابق شام سوا 6 بجے ہوا جب ہال میں عیدمیلاد النبی صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کے سلسلے میں تقریب جاری تھی۔

غیر ملکی خبر رساں ایجنسی اے ایف پی کے مطابق تقریب کی میزبانی کرنے والے اُرانوس شادی ہال کے ایک منیجر نے بتایا کہ تقریب کے عین وسط میں خود کش بمبار نے خود کو دھماکے سے اڑا لیا۔

انہوں نے نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر بتایا کہ دھماکے میں بڑی تعداد میں ہلاکتیں ہوئیں اور خود میں نے 30 لاشیں گنی ہیں اور ایسا محسوس ہوا کہ تقریب میں شریک علما کو نشانہ بنایا گیا۔

آخری اطلاعات تک حملے کی ذمے داری کسی گروپ نے قبول نہیں کی تھی۔

واضح رہے کہ حال ہی میں کابل میں ہونے والے خود کش دھماکے کی ذمے داری داعش نے قبول کی تھی۔

ستمبر میں ریسلنگ کلب میں ہونے والے دھماکے میں 26 افراد کی ہلاکت کے بعد سے اب تک یہ افغانستان میں ہونے والا سب سے بدترین حملہ ہے۔

اشتہار


اپنا تبصرہ بھیجیں