reason-ghee-beneficial-than-oil

گھی استعمال کرنے کے پانچ فوائد

reason-ghee-beneficial-than-oil

اگر آپ پاکستان کے شہری ہیں تو گھی آپ کے لیے کوئی نئی چیزنہیں‌ ہوگی- گھی مکھن سے تیارکیا جاتا ہے اورپاکستانی عوام انتہائی شوق سے گھی استعمال کرتی ہے چاہے اس سے پراٹھے بنانے ہوں، ساگ پرڈال کرکھانا ہو یا مختلف اقسام کے سالن تیارکرنے ہوں- گھی کھانے کے ذائقہ میں‌ مزید نکھارپیداکردیتا ہے اور اسی وجہ سے اس کا استعمال کافی عام ہے-

لیکن اکثرلوگ یہ سوال اٹھاتے ہیں کہ کیا گھی کا استعمال صحت کے لیے مفید ہے؟ اگرآپ بھی ان لوگوں میں شامل ہیں جو گھی کے استعمال کو مُضرِ صحت سمجھتے ہیں تو آپ کے لیے نیچے پانچ ایسی وجوہات دی گئی ہیں جنہیں پڑھ کرآپ روزمرہ کی خوراک میں گھی کا اضافہ ضرورکریں گے-

1- گھی تیل سے کم زہریلا ہوتا ہے-

تیزآنچ پرپکائے جانے پربیجوں اورنباتات سے بنے تیل کے مقابلہ میں گھی میں سے بہت ہی کم زہریلے مرکبات نکلتے ہیں- ایک تحقیق کے مطابق گھی کے مقابلہ میں‌ جب سویابین تیل کو 160 ڈگری سینٹی گریڈ تک گرم کیا جاتا ہے تواس میں سے نکلنے والے ایکرائل امائڈ نامی کیمیائی مرکب کی مقدارگھی کے مقابلہ میں دس گنا زیادہ ہوتی ہے-

2- گھی زیادہ درجہ حرارت برداشت کرسکتاہے

دوسرے الفاظ میں عام تیل کے مقابلہ میں گھی کو آگ پکڑنے یا دھواں‌ چھوڑنے کے لیے بہت زیادہ درجہ حرارت کی ضرورت ہوتی ہے- تیز درجہ حرارت تیل کو آزاد زرات میں‌ تبدیل کردیتا ہے جو کہ جسم کے خلیوں کو نقصان پہنچا سکتے ہیں- دوسرے الفاظ میں گھی نہ صرف زیادہ صحت افزاء ہے بلکہ کھانا پکاتے ہوئے زیادہ محفوظ بھی ہے-

3- گھی آسانی سے خراب نہیں ہوتا

گھی کی ایک اوراہم بات یہ بھی ہے کہ اسے فریج میں رکھنے کی ضرورت نہیں ہوتی اوریہ کمرے کے درجہ حرارت پربھی کئی ہفتوں تک صحیح‌ سلامت رہ سکتا ہے اور جلدی خراب نہیں ہوتا-

4- صحت مند عملِ انہضام

تحقیق سے ثابت ہوا ہے کہ کینونکہ گھی مکھن سے زیادہ مرتکز ہوتا ہے اس لیے اس میں‌ بیوٹارک ایسِڈ اورچکنائی کی مقدار زیادہ ہوتی ہے اس لیے اس سے عملِ انہضام بہترہوتا ہے اور معدہ کی نالیوں‌ کی صحت بھی بہتررہتی ہے-

5- وزن میں‌ کمی

گھی کے زیادہ استعمال سے جسم پرچربی کی مقدار کم ہوجاتی ہے جو کہ ایسے لوگوں کے لیے انتہائی مفید ہے جوکہ اپنا وزن کم کرنا چاہتے ہیں-

کیٹاگری میں : صحت

اپنا تبصرہ بھیجیں