نواز شریف کیخلاف ریفرنسز، جج نے فیصلہ لکھنا شروع کردیا

سابق وزیراعظم نواز شریف کے خلاف دائر ریفرنسز پر احتساب عدالت کے جج محمد ارشد ملک نے فیصلہ تحریر کرنا شروع کردیا ہے ۔

نوازشریف کیخلاف العزیزیہ اور فلیگ شپ ریفرنسز کا فیصلہ 24 دسمبر کو سنایا جائے گا،جج نے آج سماعت کے دوران سابق وزیراعظم کی نئی دستاویز پیش کرنے کی درخواست منظور کی۔

جج محمد ارشد ملک نے ساتھ ہی نواز شریف کے وکیل کی فیصلہ موخر کرنے کی درخواست مسترد کرتے ہوئے کہا تھا کہ میں کوشش کروں گا کہ مقررہ تاریخ پر ہی فیصلہ سنایا جائے، یہ میری ٹینشن ہے، آپ کیوں پریشان ہو رہے ہیں ؟

ذرائع کے مطابق جج محمد ارشد ملک نے اسٹاف کو دیر رکنے کی ہدایت کردی ہے اور ساتھ ہی ہفتہ اور اتوار کی چھٹیاں بھی منسوخ کردی ہیں۔

ذرائع کے مطابق جج نے 24 دسمبر کے سیکیورٹی انتظامات کےلئے ڈپٹی کمشنر کو بھی طلب کرلیا ہے ۔

نواز شریف کی درخواست پر حسن نواز کی جائیداد کی فروخت کی دستاویز ریکارڈ کا حصہ بنادی گئی ہے۔

عدالت نے نیب کی دستاویز قبول نہ کرنے کی درخواست مسترد کرتے ہوئے کہا کہ انصاف کے تقاضے پورے کرنے کے لیے دستاویز ریکارڈ کا حصہ بنائی گئی ہیں۔

اشتہار


اپنا تبصرہ بھیجیں