مسلم لیگ(ق) اور گورنر پنجاب کے درمیان اختلافات میں شدت آگئی

لاہور: پنجاب میں تحریک انصاف کی اتحادی مسلم لیگ(ق) اور گورنر پنجاب چوہدری محمد سروس کے درمیان اختلافات میں شدت آگئی۔

اسپیکر پنجاب اسمبلی چوہدری پرویز الہیٰ نے گور نر کے ’’آب پاک اتھارٹی‘‘ کے پٹیرن انچیف بننے کی مخالفت کر دی ہے، اسپیکر نے 29 دن سے پنجاب اسمبلی سے منظور ہونے والے ’’آب پاک اتھارٹی‘‘ کا بل روک رکھا ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ گور نر ہاؤس کے 5 سے زائد بار رابطے کے باوجود اسپیکر نے بل حتمی منظوری کے لیے گورنر کو نہیں بجھوایا جس کے بعد بل گورنر ہاؤس منگوانے کے لیے وزارت قانون سے رابطہ کرنے اور دیگرقانونی آپشنز استعمال کر نے پر غور کیا جارہا ہے۔

ذرائع نے بتایا کہ مذکورہ بل وزیر اعظم عمران خان اور پنجاب کابینہ کی منظوری کے بعد پنجاب اسمبلی میں منظوری کے لیے آیا تھا اور بل روکے جانے کا معاملہ وزیر اعظم عمران خان کے علم بھی آچکا ہے۔

ذرائع کا مزید کہنا ہے کہ(ق) لیگ وعدے کے باوجود چوہدری مونس الہیٰ کو وفاقی وزیر نہ بنانے پر بھی تحر یک انصاف سے ناراض ہے۔

اشتہار


اپنا تبصرہ بھیجیں