چوہدری شوگر ملز کیس: نیب نے مریم نواز کو گرفتار کرلیا

قومی احتساب بیورو (نیب) نے چوہدری شوگر ملز کیس میں مسلم لیگ (ن) کی نائب صدر مریم نواز کو گرفتار کر کے نیب ہیڈکوارٹر منتقل کر دیا۔

نیب کی جانب سے جاری ہونے والے بیان کے مطابق مریم نواز اور یوسف عباس کو چوہدری شوگر ملز کیس میں گرفتار کیا گیا ہے۔

بیان میں کہا گیا کہ نیب کے حکم پر ڈاکٹرز کی ٹیم ملزمان کا طبی معائنہ کرے گی جبکہ انہیں جمعہ کو ریمانڈ کے لیے احتساب عدالت میں پیش کیا جائے گا۔

قبل ازیں ذرائع کا کہنا تھا کہ مسلم لیگ (ن) کی رہنما مریم نواز کو نیب نے چوہدری شوگر ملز کیس میں آج طلب کیا تھا جہاں ان سے اس کیس سے متعلق مالیاتی امور کی تفصیلات طلب کی گئی تھیں۔

تاہم مریم نواز نے نیب کے سامنے پیش ہونے سے معذرت کی تھی اور جیل میں قید اپنے والد سابق وزیر اعظم نواز شریف سے ملاقات کے لیے چلی گئی تھیں۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ مریم نواز کو کوٹ لکھپت جیل میں اپنے والد نواز شریف سے ملاقات کے بعد واپس جاتے ہوئے راستے سے گرفتار کیا گیا، جس کے بعد انہیں نیب ہیڈ کوارٹرز منتقل کردیا گیا۔

مریم نواز کے نیب کے سامنے پیش نہ ہونے پر باقاعدہ ان کے وارنٹ گرفتاری جاری کیے گئے تھے اور تحویل میں لیتے ہوئے انہیں وہ وارنٹ بھی دکھائے گئے۔

جب انہیں گرفتار کیا گیا تو اس وقت بڑی تعداد میں لیگی کارکنان ان کے ہمراہ موجود تھے، جن میں شدید غم و غصہ پایا جاتا ہے۔

لیگی نائب صدر کی گرفتاری کے کچھ دیر بعد نیب نے سابق وزیر اعظم نواز شریف کے بھتیجے یوسف عباس کو بھی گرفتار کر لیا۔

اشتہار


اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں