جب تک زندہ ہوں کسی کو این آر او نہیں دوں گا، وزیراعظم

وزیر اعظم عمران خان نے ایک مرتبہ پھر دہرایا ہے کہ کوئی مارچ کرے یا بلیک میل کرنے کا نیا طریقہ اپنا لے لیکن جب تک وہ زندہ ہیں کسی کو این آر او نہیں دیں گے۔

ننکانہ صاحب میں گرونانک یونیورسٹی کے سنگ بنیاد کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم نے کہا کہ آزادی مارچ والے موجودہ حکومت کی کامیابی سے خوفزہ ہے۔

مسلم لیگ (ن) کے قائد نواز شریف سے متعلق وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ سابق وزیراعظم کو بہترین طبی سہولیات فراہم کی جارہی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ عدالت نے وفاق اور صوبائی حکومت سے پوچھا ہے کہ آپ کل تک نواز شریف کی زندگی کی ضمانت دے سکتے ہیں؟

وزیراعظم نے کہا کہ ’میں تو اپنی زندگی کی ضمانت نہیں دے سکتا کسی کی جان کی ضمانت کیسے دے سکتا ہوں‘۔

عمران خان نے کہا کہ پاکستان کے معروف ڈاکٹروں کی جانب سے نواز شریف کو طبی سہولیات فراہم کی گئیں، پنجاب حکومت کی صوبائی حکومت نے سابق وزیراعظم کو بہتر علاج کی سہولت دی۔

وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ وہ قوم بڑی قوم نہیں بن سکتی جس ملک میں طبقاتی قانون ہوگا، طاقتور طبقے کے لیے قانون میں گنجائش جبکہ غریب کے لیے علیحدہ قانون ہو۔

انہوں نے کہا کہ مدینہ کی ریاست ایک سال میں نہیں بنی تھی، ایک عمل کے نتیجے میں وجود میں آئی جہاں صرف قانون کی بالا دستی تھی۔

عمران خان نے کہا کہ طبقی نظام کی وجہ سے ملک ترقی نہیں کرسکتا، تمام خوشحال ممالک نے تمام لوگوں کے لیے یکساں قوانین کو اہمیت دی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں