پی ٹی آئی کور کمیٹی کا پنجاب میں انتظامی تبدیلیوں کا فیصلہ

تحریک انصاف کی کور کمیٹی نے پنجاب میں انتظامی تبدیلیوں کا فیصلہ کرلیا ہے۔

ذرائع کے مطابق وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت پارٹی کی کور کمیٹی کا اجلاس ہوا، جس میں ارکان نے پنجاب حکومت کے انتظامی امور پر تحفظات کا اظہار کیا۔

اس معاملے پر وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کی بھی وزیراعظم عمران خان سے ملاقات ہوئی ہے۔

اجلاس میں تحریک انصاف کے خلاف فارن فنڈنگ کیس پر بریفنگ دی گئی، اس معاملے پر بابر اعوان کو اہم ٹاسک بھی دیا گیا۔

ذرائع کے مطابق بابر اعوان فارن فنڈنگ کیس سے متعلق کل اہم پریس کانفرنس کریں گے۔

کور کمیٹی اجلاس میں ملک کی معاشی و سیاسی صورتحال کے جائزے کے ساتھ مہنگائی پر قابو پانے کے لیے ہنگامی اقدامات کا بھی جائزہ لیا گیا۔

ذرائع کے مطابق اجلاس میں وزیراعظم نے ناروے میں مسلمانوں کے جذبات مجروح کرنے کے واقعے کی شدید الفاظ میں مذمت کی ہے۔

عمران خان نے وزارت خارجہ کو ناروے کے واقعے پر اسلامی کانفرنس تنظیم سے رابطہ کرنے اور انہیں ہنگامی اجلاس بلانے کے لیے خط لکھنے کی ہدایت بھی کی۔

ذرائع کے مطابق وزیراعظم نے اپنے خطاب میں کہا کہ ناروے واقعہ اسلامو فوبیا کی ایک تازہ مثال ہے، اسلام مخالف کارروائیاں کسی صورت قبول نہیں کریں گے۔

کور کمیٹی نے بھی ناروے میں مسلمانوں کے جذبات مجروح کرنے کے واقعے کی شدید الفاظ میں مذمت کی۔

اجلاس میں پی ٹی آئی کے منشور پر عمل درآمد اور حکومتی بیاننے کو موثر بنانے سے متعلق حکمت عملی طے کی جائے گی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں