کورونا وائرس: کراچی کے متعدد علاقے مکمل سیل کرنے کا حکم

کراچی: انتظامیہ نے کورونا وائرس کے کیسز میں شدید اضافے کے باعث کراچی کے متعدد علاقے مکمل سیل کرنے کا حکم جاری کردیا۔

ضلع شرقی کے کئی علاقوں میں کورونا وائرس کے متاثرہ مریضوں میں تشویشناک حد تک اضافہ ہوگیا جس کے باعث ڈپٹی کمشنر ضلع شرقی نے متاثرہ علاقے مکمل سیل کرنے کے احکامات جاری کردیے۔

کورونا وائرس کی روک تھام کے پیش نظر سیل کی گئی یوسی 10 جمشید کوارٹرز، جہانگیر روڈ، مارٹن کوارٹر، پی آئی بی کالونی پر مشتمل ہے۔ یوسی 10 میں جیکب لائن لائنز ایریا، ریمبو سینٹر صدر، شہاب الدین مارکیٹ، نیو پریڈی اسٹریٹ، مزار قائد، امام بارگاہ علی رضا، تھانوی مسجد، باغ جناح گرائونڈ کے علاقے شامل ہیں۔

یوسی 2 منظور کالونی میں جونیجو ٹائون اور دیگر علاقے علاقے شامل ہیں۔ اسی طرح فیصل کینٹ جوہر چورنگی، جوہر موڑ، گلستان جوہر بلاک 11، 12، 13، 17، 18، 19، 20، 21،، رابعہ سٹی، حبیب یونیورسٹی پر مشتمل یوسی بھی سیل کردی گئی ہے۔

یوسی 30 صفورہ میں کرن اسپتال، میمن اسپتال، نیو رضویہ، سچل گوٹھ، چیپل سن سٹی، جوہر کمپلیکس، موسمیات، یونیورسٹی روڈ پر مشتمل ہے۔ یوسی 29 گلزار ہجری میں پیراڈائز بیکری، کینز فاطمہ سوسائٹی، پوسٹ آفس سوسائٹی، ابوالحسن اصفہانی روڈ کے علاقے شامل ہیں۔ یوسی 27 پہلوان گوٹھ میں نیپا چورنگی، بلاک 11 گلشن اقبال، سفاری پارک، الہ دین پارک، گلستان جوہر بلاک 1، 2، 3، 4، 5، 6، 7، 14 اور 15 کے علاقے آتے ہیں۔

یوسی 25 گلشن 2 میں گلشن اقبال بلاک8، 19، 20 بیت المکرم مسجد، واٹر بورڈ کالونی، نیشنل اسٹیڈیم، ایکسپو سینٹر، سر شاہ سلیمان روڈ پر مشتمل ہے۔ یوسی 24 میں جمالی کالونی اسکیم 33، کوئٹہ ٹائون، ٹیچرز سوسائٹی، موٹر وے ایم نائن کے علاقے شامل ہیں۔ یوسی 23 ڈالمیا گلشن اقبال بلاک 10، میلینئم مال، ڈالمیا، شانتی نگر، اسٹیڈیم روڈ پر مشتمل ہے۔ یوسی 22 گیلانی ریلوے اسٹیشن گلشن اقبال بلاک 13 بلاک اے، سی، ڈی، یونیورسٹی روڈ کے علاقوں پر مشتمل ہے۔

واضح رہے کہ وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ کا کہنا ہے کہ گزشتہ 24 گھنٹوں میں صوبے میں دنیا کی سب سے زیادہ اوسط شرح سے کورونا کیسز سامنے آئے ہیں، یہ بات انتہائی تشویش ناک ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں